فلسطینی امریکا کیخلاف مزاحمت میں تیزی لائیں، ایران

تہران: ایران نے فلسطینیوں سے جدوجہد آزادی اور امریکا کیخلاف مزاحمت کو تیز کرنے کا کہا ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق ایران کی وزارت خارجہ کے بیان میں کہا گیا ہے کہ امریکی پالیسیوں کے کیخلاف مزاحمت کو تیز کرنے کا وقت آگیا ہے، فلسطینیوں کو امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی یروشلم اور گولان کی پہاڑیوں سے متعلق پالیسیوں کے تناظر میں اپنی مزاحمت میں اضافہ کرنا ہوگا۔

ایرانی وزارت خارجہ کے بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ امریکی صدر ٹرمپ کا مقبوضہ بیت المقدس (یروشلم) کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کرنا اور گولان کے مقبوضہ پہاڑی علاقوں کو اسرائیلی ریاست کا حصہ تسلیم کرلینے سے ثابت ہوگیا ہے کہ فلسطینیوں کی برسوں سے جاری مزاحمت درست راستہ ہے۔

واضح رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے گزشتہ برس یروشلم کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرکے سفارت خانہ تل ابیب سے یروشلم منتقل کیا تھا اور حال ہی میں گولان کے پہاڑی علاقوں میں اسرائیل کے قبضے کو آئینی تسلیم کرتے ہوئے اس علاقے کو اسرائیل کی سرزمین کا حصہ ماننے کا اعلان کیا تھا جس پر شام، ترکی اور ایران کی جانب سے سخت ردعمل سامنے آیا تھا۔

تبصرہ کریں

آپ کی ایمیل یا ویبشایع نہیں کی جائے گی. لازمی پر کریں *

*